اقرار نگر کو گدائی کا ہے

From Wikisource
Jump to navigation Jump to search
اقرار نگر کو گدائی کا ہے
by احمد حسین مائل

اقرار نگر کو گدائی کا ہے
دعویٰ افلاس و بے نوائی کا ہے
ہر بات میں ہے فروتنی کا اظہار
یہ بھی انداز خود ستائی کا ہے


This work was published before January 1, 1928, and is in the public domain worldwide because the author died at least 100 years ago.